پہلی محبت کی دستک

ROHAAN

Senior Member
Aug 14, 2016
987
626
393
1589076574606.png


پہلی محبت کی دستک

رات پھر خوابوں کے دریچے پر
پہلی محبت کی دستک ہوئی
وہی ناز، وہی مرجع حسن
عارض میں وہی رنگ غازہ
ریشمی زلفوں میں الجھا وہ باریک آنچل
پتلے تند کمان ابرو
شگفتہ آنکھوں میں انکار و اقرار کی صریح کشمکش
اداؤں میں وہی ظلم اور دیا کی حریفانہ آمیزش
اسکے مرمریں سراپے سے چھوٹتے تار
مجھے لحظہ لحظہ زنجیر کر رہے تھے
میرے خوابوں کی چوکھٹ پر کھڑی
میری پہلی محبت
رات بھر مجھ سے کہتی رہی
تیرے اس خواب کی تعبیر ہوں میں
تیری زیست کے شب کدوں میں
تنویر ہوں میں
مجھے بھلا نہیں سکتے تم
مجھے مٹا نہیں سکتے تم
 
Top