Aaj Ka Intikhaab............!!

  • Work-from-home

Kavi

Super Star
Oct 30, 2015
13,217
3,477
1,313
Dubai

آج کا دن بھی کاٹ لیا ہے ہنستے ہنستے کاموں میں
تیرے دھیان سے بچتے بچتے شُکر ہُوا یہ شام ڈھلی
 

Kavi

Super Star
Oct 30, 2015
13,217
3,477
1,313
Dubai

رکھنے والے نے عجب ڈھنگ سے رکھا ہے ہمیں
سبز ہوتے بھی نہیں شاخ سے جھڑتے بھی نہیں
 

Kavi

Super Star
Oct 30, 2015
13,217
3,477
1,313
Dubai

میں وہ ہنگامہ ہوں جس کا نہیں کوئی بھی اثر
تُم وہ چُپ ہو جسے آواز کہا جاتا ہے
 

Kavi

Super Star
Oct 30, 2015
13,217
3,477
1,313
Dubai

موسمِ ہجر کی نمناک اُمیدوں کی طرح
ہم نے چُپ چاپ اُسے راہ بدلتے دیکھا
 

Kavi

Super Star
Oct 30, 2015
13,217
3,477
1,313
Dubai

تیری تاثیر الگ ہے کہ تیرے بارے میں
سوچتا ہوں تو کوئی زخم سا بھر جاتا ہے
 

Kavi

Super Star
Oct 30, 2015
13,217
3,477
1,313
Dubai

میں نے سامانِ سفر باندھ کے پھر کھول دیا
ایک تصویر نے دیکھا مجھے الماری سے
 

Kavi

Super Star
Oct 30, 2015
13,217
3,477
1,313
Dubai

تِری خوشبو ، تِری باتیں، تِرا چہرا، تِری یادیں
چُھپانے کو مِرے دل میں ہزاروں قید خانے ہیں
 

Kavi

Super Star
Oct 30, 2015
13,217
3,477
1,313
Dubai

پھر دل کو ہو گئی ہے وہی راہ گزر عزیز
پھر آ گئے فریب میں ہم مدتوں کے بعد
 

Kavi

Super Star
Oct 30, 2015
13,217
3,477
1,313
Dubai

میں نے دیکھا ہے تیرے ہونے سے
میری آنکھوں میں خواب رہتے ہیں
 

Kavi

Super Star
Oct 30, 2015
13,217
3,477
1,313
Dubai

خاموش ہے گاؤں تِری ہجرت کے ہی دن سے
پیڑوں پہ پرندے بھی تِرے بعد نہ بولے
 

Kavi

Super Star
Oct 30, 2015
13,217
3,477
1,313
Dubai

زنجیر میں الجھے ہیں کہیں وقت کے پاوں
وہ دن جو گزرنا تھا گزرتا بھی نہیں ہے
 

Kavi

Super Star
Oct 30, 2015
13,217
3,477
1,313
Dubai

کُندن ہوئے ہیں‌ آگ بھی اپنی جلا کے ہم
ہم پرکسی سُنار کی مرضی نہیں چلی
 

Kavi

Super Star
Oct 30, 2015
13,217
3,477
1,313
Dubai

عُمرِ رواں کے رخت میں ایسا نہیں کوئی
جو پَل تُمہاری یاد سے باہر بسر ہوا
 

Kavi

Super Star
Oct 30, 2015
13,217
3,477
1,313
Dubai

بُھولے سے لکھ دیا تھا تِرا نام جس جگہ
اب تک وہاں اُترتے ہیں خوشبو کے قافلے
 

Kavi

Super Star
Oct 30, 2015
13,217
3,477
1,313
Dubai

تیری دہلیز پہ اقرار کی امید لیے
پھر کھڑے ہیں تِرے انکار کے مارے ہوئے لوگ

 

Kavi

Super Star
Oct 30, 2015
13,217
3,477
1,313
Dubai

اِک دُھوپ سے اُلجھا ہوا سایہ ہے کہ میں ہوں
اِک شام کے ہونے کا بھروسہ ہے کہ تم ہو
 

Kavi

Super Star
Oct 30, 2015
13,217
3,477
1,313
Dubai

میں دل کی خواہشات سے مجبور تھا مگر
میں دل کی واردات میں شامل نھیں رہا
 

Kavi

Super Star
Oct 30, 2015
13,217
3,477
1,313
Dubai

نیند کی گولیاں لے لیتے ہیں ورنہ ہم لوگ
رات کے پچھلے پہر سانس نہیں لے سکتے
 

Kavi

Super Star
Oct 30, 2015
13,217
3,477
1,313
Dubai

زندگی اِتنی بھی دشوار نہیں تیرے بغیر
تُجھ کو ہر روز سرِ شام بُھلانا ہی تو ہے

 

Kavi

Super Star
Oct 30, 2015
13,217
3,477
1,313
Dubai

میں وہ صحرا جسے پانی کی ہوس لے ڈُوبی
تُو وہ بادل جو کبھی ٹوٹ کے برسا ہی نہیں
 
Top